اہل سنت والجماعت پاکستان کے صوبائی صدر اور ممتاز عالم دین علامہ عطائ محمد دیشانی کی اعزاز میں اعشائیہ

اہل سنت والجماعت پاکستان کے صوبائی صدر اور ممتاز عالم دین علامہ عطائ محمد دیشانی نے کہا ہے کہ آج عالم اسلام ، پاکستان اور سعودی عرب کو کمزور کرنے کی سازشیں ہورہی ہے لیکن ہمیں اتحاد ، بھائی چارے اور پیارومحبت کے ساتھ ان سازشوں کو ناکام بنانے میں اپناکردار ادا کرنا ہوگا ۔سمندر پار پاکستانی نہ صرف اپنے خاندانوں کی کفالت کررہے ہیں بلکہ اربوں ڈالر کا زرمبادلہ بھیج کر پاکستان کی معیشیت کا پہیہ بھی اپنے خون پیسنے دھکیل رہے ہیں۔پاکستان کی سیاست میںاپنے حقوق کے حصول کے لئے شرافت کی نہیںبلکہ سلطان راہی کی فلمی ڈائلا گ بولنے اور افریدی طر ز بیٹنگ اختیارکرنا پڑ تا ہے ورنہ کے ٹگوں کے ہاتھوں لوٹنا ہی پڑتا رہے گا ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے عمرے کی ادائیگی کے بعد یہاں ریاض میں اپنے حلقے بٹ گرام کے معززین ایک بڑے جرگے سے خطاب کے دوران کیا ۔انہوں نے کہا کہ پاکستان اور سعودی عرب دینی ، اسلامی جذبے و عقیدت او راخوت کے مضبوط رشتوں میں بندھا ہوا ہے اس دھرتی سے ہمارے بہت سے احساسات ، توقعات ، مذہبی لگاؤ جڑا ہوا ہے یہاں رہتے ہوئے اپنے افعال و کردار کی ایسے مثال قائم کرے کہ لوگ نام سنتے ہی آپ کو سلام پیش کرے آپ جہاں بھی جائیں اسلام ٰ پاکستانیت ، پختون و مشرقی روایات اور آپ کے اخلاق و کردار پر کوئی حرف نہ آئے ۔۔اپنے علاقے اور پی ایف 28کا ذکرکرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ گزشتہ ستر سالوں سے بٹ گرام کی تقدیرپیرودوہائی کے ٹگوں کے ہاتھوں میں یرغمال بنا ہواہے یہ واحد بد قسمت ضلع ہے جہاں کی اکثریت پر پانچ تن پاک راج کررہے ہیں یہاں تک ان کے لولے لنگڑے اور بہرے ، اندھے جانشین بھی ہماری تقدیر سے کھلواڑ کررہے ہیں اور عوام کی بے وقوف بناکر ٹوپیوں پہ ٹوپیاں اور قمیضوں کا تبادلہ کرہے ہوئے بٹ گرام کی ترقی اور عوام کی تقدیر بدلنے کے بجائے اپنی تجویریاں بھررہے ہیں ۔ انہوں نے بٹ کرام کے عوام سے آپیل کرتے ہوئے کہا کہ آپ جس پارٹی سے وابسطہ ہیں یا آپ کے نظریات جو بھی ہے بٹ گرام کی مفادات ترقی اور ہوکر 2018 کی الیکشن میں ان مورثی و روایاتی سیاست دانوں کے بتوں کو پاش پاش کرتے ہوئے جان چھڑائیں اور انہیں ٹوپیوں کے ساتھ ساتھ شلواریں تبدیل کرانے پر مجبور کریں اور گزشتہ ستر سالوں کا حساب بے باق کرانے ان کی احتساب کرانے اور اپنے حقوق کا حصول یقینی بنانے میں اپنا کردار ادا کرے ۔ اس سے قبل قومی جرگے سے قاری عبد الوہاب نے اپنے خطاب میں کہا کہ آج کا دور ووٹ کی پرچی سے تبدیلی لانے او رحکمرانی کرنے کا کہا آج ہمیں چاہئے کی ووٹ کی طاقت سے ستر سالوں سے ہمیں اندھیروں اور پسماندہ رکھنے والوں کا احتساب کرتے ہوئے دیشانیجیسے لیڈر کو آگے لانے میں آپنا کردار ادا کرےحلقہ این اے بارہ سے اہل سنت والجماعت کے متوقع امیدوار سلطان بلوچ نے اس امر پرزوردیا کہ انے والے الیکشن میں اسلام،پیغمبر اسلام اور صحابہ کے غلاموں کو کامیاب کراکر اپنے دینی و ملی جذبے کا ثبوت دیں جبکہ علامہ کے ساتھ پاکستان سے آئے ہوئے جماعت کے رکن سید رفیق شاہ نے اپنے خطاب میں کہا کہ چندبنڈل پائپ پر اپنے ایمان خراب کرنے کے بجائے درباریت کا طوق گلے سے اتار کر خان ازم کے خاتمے کے لئے اسلامی قوتوں کا ساتھ دیں ۔ قومی جرگے کے نظامت محمد شعیب دیشانی او رمولانا مفتی عبدالسلام نے انجام دیں ۔

Facebook Comments